Month: March 2016

ایک پاکستانی

زوال شدہ قوموں کا یہ مسئلہ ہیں کہ وہ اپنے الزام اوروں پے دھر دے ۔ یہ سب کچھ یہودیوں کی سازش ہیں ، یہ سب کچھ امریکہ کی سازش ہے ، یہ سب کچھ ہندوؤں کی سازش ہیں ۔ جو ہر دکا ندار جھوٹ بول رہا ہیں یہ امریکہ کی سازش ہیں ،؟ رات کو شراب پی جا رہی یہ امریکہ کی سازش ہیں ؟ زنا کے اڈے چل رہے یہ امریکہ کی سازش ہیں ؟ .. چپڑاسی سے لے کر اوپر تک رشوت چل رہی ہے باپ کا گریباں چاک کر رہی اولاد یہ کس کی سازش ہیں ؟.. مایئں چھپتی پھر رہی جوان اولاد کی غضب سے .. یہ کس کی سازش ہیں ؟.. طاقتور ظالم ہیں یہ کس کی سازش ہیں ؟.. مظلوم بھی ظالم ہے ظالم بھی ظالم ہے یہ کس کی سازش ہیں ؟.. …. “تو ادھر اٗدھر کی نہ بات کر ..یہ بتا کے قافلہ کیوں لٹا …مجھے رہزنوں سے گلہ نہیں ..تیری رہبری کا سوال ہیں” …….. ہماری اخلاقی گراوٹ نے ہمیں تباہ کیا ہے امریکہ نے …

قانون نسواں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔یا ڈرامہ؟

  گھر کے بننے سے پہلے ہی صاف اور واضح الفاظ میں امی کو بتا دیا تھا کہ امی گھر کا نقشہ جیسا مرضی ہو مگر آپ نے گھر کے ایک حصے میں میرے پودوں کے لیے کیاری ضرور بنوانی ہےتاکہ میں خوبصورت پھولوں سے نہ صرف  کیاری کو بھر سکوں بلکہ گھر کو بھی چار چاند لگ جائیں گے۔گھر بن گیا ماں نے میری مرضی کے مطابق کیاری بھی رکھ لی۔نئے گھر جاتے ہی کیاری میں نے خوب مہنگے مہنگے پھول لگا دیے۔اور  اپنے دوسرے کاموں میں مصروف ہو گئی۔کیاری کا شوق بھول گیا تھا۔ماں صبح شام صرف  ایک ہی بات دہراتی تھی بس دو دن کا شوق تھا کیاری بنوانے کا اور پھول لگانے کا یہ نہیں پتا ہوتا پودوں کو زندہ رہنے کے لیے پانی  کی خوراک کی اور روزانہ دیکھ بھال کی ضرورت ہوتی ہے۔مگر میں بس ماں کی باتوں کو ایک کان سے سنتی اور دوسرے  کان سے نکال دیتی تھی ماں کیا ایک بات کے   پیچھے ہی پڑ جاتی ہے۔  26  فروری 2016 کو پاکستان کے سب بڑے صوبہ …

Pakistan Railways shortfall rises to Rs14bn despite earning more

Pakistan is a struggling state. We need to think several times before investing. We are buying engines form China which are not reliable. Pakistan should start taking actions for the national interest. Authorities should strictly keep an eye on all the actions to avoid the drainage of money. Here we are sharing an article written by ZAHEER MAHMOOD SIDDIQUI on MAR 03, 2016  published in Dawn.

تحفظِ نسواں-عدم تحفظ مرداں؟

پاکستان میں آج کل یہ خبر آگ کی طرح  پھیلی ہوئی ہے کہ خواتین کے تحفظ کے لیے بل پاس کیا گیا ہے۔اس بل کی وجہ سے کہیں خواتین میں تسلی اور اطمینان دیکھنے میں آیا ہے تو کہیں مرد حضرات جن میں سرِ فہرست  مولانا حضرات ہیں کی طرف سے بہت زیادہ طنزو تنقید کے جذبات بھی دیکھنے کو ملے ہیں۔یہاں تک کہ  سوشل میڈیا ویب سائٹس پہ مرد حضرات کو بہت فنی انداز میں  آہستہ آواز میں گفتگو کرنے کے طعنے  اور ہدایات دی جارہی ہیں۔ اور اگر قانون کی بات کی جائے تو اس میں واضح طور پر گھریلو  خواتین کے لیے پاس کیا گیا ہے تاکہ ان کے شوہر انھیں  تنگ نہ کریں۔مگر ان خواتین کا  کیا  جو گھروں سے باہر دوسرے مردوں کے ساتھ لوکل گاڑیوں میں سفر کرتی ہیں ،ان کے ساتھ ایک ہی دفتر کی چھت تلے کام کرتی ہیں،کبھی کسی  مجبوری کے تحت یا اپنے شوق کی خاطر خود کو بہادر  سمجھ کر گھر کے معاشی حالات بہتر کرنے کی غرض سے گھر سے نکلتی ہیں یا …

Is Pakistan’s problem Urdu?

Urdu is our national language. We have to stop accusing Urdu for all the flaws and drawbacks in our society. Not language, rather our mind set is the root cause of our current situation. We discourage critical thinking which is highly appreciated by the authorities as they don’t like to be questioned. Here we are sharing an article written  by PERVEZ HOODBHOY published in Dawn on MAR 05, 2016. 

Pakistan’s Political Economy.

Pakistan really needs to improve its infrastructure. Things like communication, transport, energy sectors are the driving force for creating wealth and alleviating poverty. But we can not totally rely on government to work efficiently rather private sectors also have to support in investment.  Here we are sharing an article written by SHAHID KARDAR published in Dawn on OCT 13, 2015. 

Must Must Read – The Orange Line

Project of orange line is no doubt will be beneficial for a large number of commuters but the question is whether the investment is worth making? Why we can’t think beyond the development of the roads?  The cost of the line that comes to Rs6bn per km is whopping in the view of many who are in the favor of the idea of improving existing local transport at a lower cost. This cannot be taken lightly because in this age when we have so many options then why we cannot use the knowledge and strategic planning to insert much needed public transit system in an appropriate way. Above all we are a developing nation we have to set our priorities either roads come first or the basic necessities, health and education. Here we are sharing a detailed article about the investment on Orange Line written by Farukh Saleem.